موتیہاری میں وزیر اعظم کی انتخابی ریلی کے لیے سیکورٹی کے وسیع انتظامات
مشرقی چمپارن ، 18 مئی (ہ س)۔ وزیر اعظم نریندر مودی کے 21مئی کو آمد کو لیکر گاندھی میدان کو سیل کر
موتیہاری میں وزیر اعظم کی انتخابی ریلی کے لیے سیکورٹی کے وسیع انتظامات


مشرقی چمپارن ، 18 مئی (ہ س)۔

وزیر اعظم نریندر مودی کے 21مئی کو آمد کو لیکر گاندھی میدان کو سیل کر دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ گراؤنڈ کے مین گیٹ پر ایک عارضی پولیس اسٹیشن کھول کر دیگر پانچ داخلی راستوں پر پولیس سخت نگرانی کر رہی ہے۔ ضلعی انتظامیہ اور پارٹی رہنما امن و امان اور تیاریوں کے حوالے سے مسلسل میٹنگ کر رہے ہیں۔

وزیر اعظم کی میٹنگ کے لیے باہر سے آئے سو سے زائد مزدور خیمے لگانے کے لیے دن رات جنگی پیمانہ پر کام کر رہے ہیں۔ سکیورٹی وجوہات کی بنا پر ان کارکنوں کو پاس جاری کر دیے گئے ہیں، ساتھ ہی عارضی تھانے میں ہر ایک کا نام ، پتہ اور موبائل نمبر درج کر دیا گیا ہے ، جس کی نگرانی خصوصی طور پر تعینات پولیس افسر کر رہے ہیں۔

گاندھی میدان میں روزانہ صبح کی سیر کے لیے جانے والے لوگوں کو پولیس اہلکاروں کے علاوہ 112 بائک سواروں کی ٹیم کے ذریعہ نگرانی کی جارہی ہے۔ موتیہاری میں پی ایم کی آمد ہو چکی ہے۔ ایمرجنسی ڈیپارٹمنٹ سے لے کر بلڈ بینک تک کو الرٹ موڈ میں رکھا گیا ہے۔ ہیلی پیڈ سے گاندھی میدان جلسہ گاہ تک ایمبولینس اور ادویات کے ساتھ ایک میڈیکل ٹیم بنانے اور گاندھی میدان میں ایک موبائل اسپتال ، موبائل میڈیکل ٹیم اور ڈاکٹروں کی ایک ٹیم رکھنے کی ہدایات دی گئی ہیں ۔

بھارت نیپال کی رکسو ل سرحد پر سیکورٹی کے حوالے سے ہائی الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔ ایس ایس بی اور پولیس نیپال سے ہندوستانی سرحد میں داخل ہونے والے لوگوں کی سخت چیکنگ کر رہی ہے۔ اس کے ساتھ ہی نیپال سے جڑی تمام سرحدوں اور حساس مقامات پر سخت نظر رکھی جارہی ہے۔

ایس پی کانتیش کمار مشرا نے کہا کہ پی ایم کی سیکورٹی کے حوالے سے پروٹوکول کو مدنظر رکھتے ہوئے سیکورٹی کے انتظامات کئے جارہے ہیں۔ حفاظتی انتظامات کے لیے باہر سے مناسب تعداد میں پولیس فورس طلب کر لی گئی ہے۔

ہندوستھان سماچار/ افضل/محمد


 rajesh pande