ای ڈی نے جھارکھنڈ کے دیہی ترقی کے وزیر عالمگیر عالم کو ٹینڈر کمیشن گھوٹالے میں گرفتار کیا۔
رانچی (جھارکھنڈ)، 15 مئی (ہ س)۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے دن بھر کی پوچھ گچھ کے بعد بدھ کی شا
ای ڈی نے جھارکھنڈ کے دیہی ترقی کے وزیر عالمگیر عالم کو ٹینڈر کمیشن گھوٹالے میں گرفتار کیا۔


رانچی (جھارکھنڈ)، 15 مئی (ہ س)۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے دن بھر کی پوچھ گچھ کے بعد بدھ کی شام کو ٹینڈر کمیشن گھوٹالے میں ریاستی دیہی ترقی کے وزیر عالمگیر عالم کو گرفتار کیا۔ ای ڈی کی پوچھ گچھ کے دوران وہ 35.23 کروڑ روپے کی وصولی کے تعلق سے کوئی تسلی بخش جواب نہیں دے سکے۔ اس سے پہلے منگل کو ای ڈی حکام نے وزیر سے ساڑھے نو گھنٹے تک پوچھ گچھ کی تھی۔ 15 مئی کو دوبارہ ای ڈی کے علاقائی دفتر آنے کو بھی کہا۔

دیہی ترقی کے وزیر کے پی ایس سنجیو لال اور ان کے معاون جہانگیر عالم کے گھر سے 35.23 کروڑ روپے کی وصولی کے بعد، ای ڈی نے وزیر کو 12 مئی کو سمن جاری کیا اور 14 مئی کو پوچھ گچھ کے لیے رانچی کے ہنہو میں علاقائی دفتر آنے کو کہا۔ 11:00 بجے بتایا گیا تھا۔ بتایا جا رہا ہے کہ ای ڈی نے عالمگیر، سنجیو اور ان کی بیوی ریٹا کو آمنے سامنے بٹھا کر پوچھ تاچھ کی۔ ای ڈی نے برآمد کیش کے بارے میں عالمگیر عالم سے پوچھ گچھ کی لیکن ای ڈی ان کے جواب سے مطمئن نہیں ہوا۔ ای ڈی نے عالمگیر سے رقم کے ذریعہ کے بارے میں پوچھ گچھ کی۔ پوچھا گیا کہ رقم کہاں سے آئی اور کمیشن کی رقم کہاں تقسیم کی گئی۔

قابل ذکر ہے کہ 5 مئی کو ای ڈی نے ٹینڈر کمیشن گھوٹالے میں وزیر عالمگیر کے پرائیویٹ سکریٹری سنجیو لال اور دیگر کی رہائش گاہوں پر چھاپہ مارا تھا۔ اس مدت کے دوران، ای ڈی نے سنجیو لال کے نوکر جہانگیر اور بلڈر منا سنگھ کے احاطے سے کل 35.23 کروڑ روپے کی نقد رقم برآمد کی تھی۔ اس معاملے میں کارروائی کرتے ہوئے ای ڈی نے عالمگیر عالم کے پرسنل سکریٹری سنجیو لال اور ان کے معاون جہانگیر عالم کو 5 مئی کی دیر رات گرفتار کیا تھا۔ اس کے بعد ای ڈی نے دونوں کو عدالت میں پیش کیا اور ریمانڈ پر لے لیا۔

ہندوستھان سماچار


 rajesh pande