سواتی مالیوال کے ساتھ مبینہ بدسلوکی پر بی جے پی کا حملہ، پوچھا کیجریوال خاموش کیوں؟
نئی دہلی، 15 مئی (ہ س)۔ عام آدمی پارٹی کی راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ سواتی مالیوال کے ساتھ مبینہ بدسل
سواتی مالیوال کے ساتھ مبینہ بدسلوکی پر بی جے پی کا حملہ، پوچھا کیجریوال خاموش کیوں؟


نئی دہلی، 15 مئی (ہ س)۔

عام آدمی پارٹی کی راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ سواتی مالیوال کے ساتھ مبینہ بدسلوکی کے معاملے میں بی جے پی لیڈر شازیہ علمی نے ایک بار پھر وزیر اعلی اروند کیجریوال پر حملہ کیا ہے۔

بدھ کو بی جے پی ہیڈکوارٹر میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس میں شازیہ علمی نے کہا کہ اروند کیجریوال کو 13 مئی کو وزیر اعلیٰ کی رہائش گاہ پر پیش آنے والے واقعے کے پیچھے کی حقیقت ملک کے لوگوں کو بتانی چاہیے۔ خواتین گزشتہ 48 گھنٹوں سے اروند کیجریوال سے یہ سوالات پوچھ رہی ہیں۔ اروند کیجریوال اب تک خاموش کیوں ہیں؟ ویبھو کمار کے خلاف انہوں نے کیا کارروائی کی؟ کیا وبھو کمار نے اروند کیجریوال کے کہنے پر سواتی مالیوال پر حملہ کیا؟ کیا سواتی مالیوال محفوظ ہے؟ انڈی الائنس اس واقعہ پر خاموش کیوں ہے؟

شازیہ علمی نے کہا کہ وہ انا ہزارے کی تحریک کے دنوں سے اروند کیجریوال کے ساتھ تھیں، اس لیے میں سب کے چہرے جانتی ہوں۔ میں یقین نہیں کر سکتی کہ کوئی ذاتی مشیر سواتی مالیوال کے ساتھ بدتمیزی کر سکتا ہے۔ سواتی مالیوال دہلی خواتین کمیشن کی سربراہ رہ چکی ہیں اور پارٹی کی سب سے پرانی رکن ہیں۔ وہ این جی او کے دنوں سے دوست ہیں۔ کیا وزیر اعلیٰ کے علم میں لائے بغیر ویبھو بدتمیزی کر سکتا ہے؟ اروند کیجریوال کو ان سوالوں کا جواب دینا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ خواتین رہنما جو مختلف موضوعات پر کھل کر بات کرتی تھیں وہ اپنے موضوعات پر خاموش ہو گئی ہیں، ان پر کوئی نہ کوئی دباو¿ ضرور ہے۔

ہندوستھان سماچار


 rajesh pande