ڈھاکہ اریچہ ہائی وے پر آتشزدگی کے واقعے کے بعد ڈی پی ایل کے دو میچ ملتوی کر دیے گئے۔
ڈھاکہ، 2 اپریل (ہ س)۔ ڈھاکہ اریچہ ہائی وے پر آگ لگنے کے واقعے کے بعد منگل کو ساور کے بی کے ایس پی گر
ڈھاکہ اریچہ ہائی وے پر آتشزدگی کے واقعے کے بعد ڈی پی ایل کے دو میچ ملتوی کر دیے گئے۔


ڈھاکہ، 2 اپریل (ہ س)۔ ڈھاکہ اریچہ ہائی وے پر آگ لگنے کے واقعے کے بعد منگل کو ساور کے بی کے ایس پی گراؤنڈ میں ڈھاکا پریمیئر لیگ کے دو میچ ملتوی کرنا پڑے۔ ٹورنامنٹ حکام کے مطابق چاروں ٹیمیں ڈھاکہ اریچہ ہائی وے پر گھنٹوں ٹریفک میں پھنسی رہیں جس کے بعد میچ ملتوی کرنا پڑا۔

ای ایس پی این کرک انفو کے مطابق، دونوں میچ بدھ کو منتقل کر دیے گئے ہیں، جبکہ پہلے بدھ کو شیڈول میچز جمعرات کو ہوں گے۔ میچ بی کے ایس پی-3 گراؤنڈ پر شیخ جمال دھان منڈی کلب اور لیجنڈز آف روپ گنج کے درمیان اور بی کے ایس پی-4 گراؤنڈ پر پرائم بینک کرکٹ کلب اور پارٹیکس اسپورٹنگ کلب کے درمیان تھے۔ انہیں مقامی وقت کے مطابق صبح 9 بجے شروع ہونا تھا۔

خبروں کے مطابق ڈھاکہ آریچہ ہائی وے پر ہمایت پور بس اسٹینڈ کے قریب منگل کی صبح 5.30 بجے ایک تیل کی لاری الٹ گئی اور اس میں آگ لگ گئی۔ آس پاس کے چار دیگر ٹرکوں اور ایک پرائیویٹ کار کو بھی آگ لگ گئی۔

ساور کے فائر سروس اور سول ڈیفنس اسٹیشن کے افسر محمد نورالاسلام نے مقامی اخبار روزنامہ پرتھم الو کو بتایا کہ حادثے میں ایک شخص کی موت ہو گئی ہے، جب کہ آٹھ دیگر کو شیخ حسینہ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف برن اینڈ پلاسٹک سرجری ہسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔

حادثے سے سڑک کے دونوں اطراف کے علاقے میں زبردست تباہی ہوئی۔ چاروں ٹیمیں تقریباً 25 کلومیٹر دور ساور کے مقامات تک پہنچنے کی کوشش کر رہی تھیں۔ ٹیمیں عام طور پر شہر کے گبٹولی علاقے سے باہر نکلتے ہوئے ڈھاکہ آریچہ ہائی وے پر جاتی ہیں۔

ڈھاکہ لیگ میں بی کے ایس پی کے میچ اکثر ٹیموں کے لیے درد سر ہوتے ہیں کیونکہ یہ دارالحکومت سے 40 کلومیٹر دور ہے۔ سرجو ترون کلب اور کرکٹ کوچنگ اسکول (سی سی ایس) کو بالترتیب 2012 اور 2013 میں بی کے ایس پی میں اپنے ڈی پی ایل میچوں میں تاخیر سے پہنچنے کے بعد ڈھاکہ پریمیئر لیگ سے باہر کر دیا گیا۔

محمڈن اسپورٹنگ کلب اور کالابگن کریرا چکرا بھی 2018 میں ڈی پی ایل میچ کے لیے دیر سے پہنچے۔ تاہم، تب تک، ڈھاکہ میٹرو پولس کی کرکٹ کمیٹی (بی سی بی کی باڈی جو کہ لیگ چلاتی ہے) نے اس سے بچنے کے لیے ٹورنامنٹ کے قوانین میں اسی طرح کے واقعے کے لیے ایک شق شامل کی تھی۔ یہ شق میچ ریفری کو معاملے پر غور کرنے کا اختیار دیتی ہے۔

سی سی ڈی ایم حکام کے مطابق اگر کوئی ٹیم میچ ریفری کو میدان میں دیر سے آنے کی وجہ بتاتی ہے اور میچ ریفری کو اس میں منطق نظر آتی ہے تو وہ کھیل دیر سے شروع کر سکتی ہے۔

ہندوستھان سماچار


 rajesh pande