ای ڈی نے اروند کیجریوال کی گرفتاری کو چیلنج کرنے والی درخواست کی مخالفت کی
-ای ڈی نے کہا، دہلی ایکسائز گھوٹالے کا سب سے بڑا فائدہ عام آدمی پارٹی کوہوا -وزیر اعلی اروند کیجریوا
ای ڈی نے اروند کیجریوال کی گرفتاری کو چیلنج کرنے والی درخواست کی مخالفت کی


-ای ڈی نے کہا، دہلی ایکسائز گھوٹالے کا سب سے بڑا فائدہ عام آدمی پارٹی کوہوا

-وزیر اعلی اروند کیجریوال کی عرضی پر 3 اپریل کو سماعت ہوگی

نئی دہلی، 2 اپریل (ہ س)۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کی طرف سے دہلی ایکسائز گھوٹالہ معاملے میں ان کی گرفتاری کو چیلنج کرنے والی درخواست کی مخالفت کی ہے۔ ای ڈی نے دہلی ہائی کورٹ میں داخل اپنے جوابی حلف نامہ میں کہا ہے کہ دہلی ایکسائز گھوٹالے کا سب سے بڑا فائدہ عام آدمی پارٹی کو ہوا ہے۔ کیجریوال کی عرضی پر بدھ یعنی 3 اپریل کو سماعت ہوگی۔

ای ڈی نے جوابی حلف نامے میں کہا ہے کہ عام آدمی پارٹی نے گوا میں 2022 کے اسمبلی انتخابی مہم میں اس گھوٹالے سے تقریباً 45 کروڑ روپئے خرچ کئے تھے۔ ای ڈی نے کہا ہے کہ عام آدمی پارٹی نے اروند کیجریوال کے ذریعے منی لانڈرنگ کی ہے۔ عام آدمی پارٹی کے ذریعہ کیا گیا یہ جرم منی لانڈرنگ ایکٹ کی دفعہ 50 کے تحت آتا ہے۔

آپ کو بتا دیں کہ کیجریوال کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے ہائی کورٹ نے 27 مارچ کو کوئی راحت نہیں دی تھی۔ ہائی کورٹ نے ای ڈی کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب داخل کرنے کی ہدایت دی تھی۔

کیجریوال اس وقت عدالتی حراست میں ہیں۔ یکم اپریل کو راؤز ایونیو کورٹ نے کیجریوال کو 15 اپریل تک عدالتی تحویل میں جیل بھیج دیا تھا۔

ہندوستھان سماچار/ عبد الواحد


 rajesh pande