تاریخ کے آئینے میں 03 دسمبر: بھوپال کا 'ہندوستان کا ہیروشیما' بننے کا درد
03 دسمبر کی تاریخ ملک و دنیا کی تاریخ میں کئی اہم وجوہات کی بنا پر درج ہے۔ اس تاریخ کو ملک میں 'ہندو

tarikh


03 دسمبر کی تاریخ ملک و دنیا کی تاریخ میں کئی اہم وجوہات کی بنا پر درج ہے۔ اس تاریخ کو ملک میں 'ہندوستان کا ہیروشیما' کے نام سے یاد کیا جاتا ہے۔ واقعہ 1984 کا ہے۔ مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال میں 02 دسمبر کی رات 8:30 بجے ہوا میں زہر گھولنے لگا۔ تیسرا شروع ہوتے ہی یہ زہریلی ہوا جان لیوا ہو گئی۔ اس کی وجہ یونین کاربائیڈ فیکٹری سے میتھائل آئوسیانیٹ گیس کا اخراج تھا۔ جب لوگ صبح بیدار ہوئے تب تک بھوپال ہیروشیما کی شکل اختیار کر چکا تھا۔ یہ حادثہ بھوپال گیس حادثہ یا بھوپال گیس سانحہ کے نام سے بھی بدنام ہے۔

گیس لیک ہونے کی وجہ ٹینک نمبر 610 میں پانی میں زہریلی میتھائل آئسوسیانیٹ گیس کا اختلاط تھا۔ اس سے ٹینک میں دباؤ پیدا ہوا اور وہ کھل گیا۔ پھر اس سے وہ گیس نکلی جس نے ہزاروں لوگوں کی جان لے لی۔ لاکھوں لوگوں کو معذور کیا۔ اس کا ڈنک آج بھی نظر آتا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ اس وقت فیکٹری کا الارم سسٹم بھی گھنٹوں بند رہا۔ بھوپال گیس سانحہ کو دنیا کے مہلک ترین صنعتی حادثے میں شمار کیا جاتا ہے۔ اس میں کتنی جانیں ضائع ہوئیں؟ کتنے معذور ہو گئے؟ اس حوالے سے آج تک کوئی درست ڈیٹا دستیاب نہیں ہے۔ حکومتی اعداد و شمار کے مطابق حادثے میں 3 ہزار 787 افراد ہلاک ہوئے، جب کہ 5.74 لاکھ سے زائد افراد زخمی یا معذور ہوئے، جب کہ سپریم کورٹ میں پیش کیے گئے اعداد و شمار کے مطابق حادثے میں 15 ہزار 724 افراد کی جانیں گئیں۔

اس حادثے کا مرکزی ملزم اس کمپنی کے سی ای او وارن اینڈرسن تھے۔ انہیں 6 دسمبر 1984 کو گرفتار بھی کیا گیا لیکن اگلے ہی دن 7 دسمبر کو انہیں ایک سرکاری طیارے کے ذریعے دہلی بھیج دیا گیا۔ وہاں سے وہ امریکہ چلا گیا۔ اس کے بعد اینڈرسن کبھی ہندوستان واپس نہیں آئے۔ عدالت نے اسے مفرور قرار دے دیا۔ اینڈرسن کا انتقال 93 سال کی عمر میں 29 ستمبر 2014 کو فلوریڈا کے ویرو بیچ میں ہوا۔

اہم واقعات

1790: لارڈ کارن والیس نے نواب آف مشیرآباد سے فوجداری مقدمات میں انصاف کی طاقت چھین لی اور صدر نظامت عدالت کو کولکاتا منتقل کر دیا۔

1796: باجی راؤ دوم کو مراٹھا سلطنت کا پیشوا بنایا گیا۔

1824: انگریزوں نے کتور قلعہ کو گھیر لیا۔

1828: اینڈریو جیکسن امریکہ کے ساتویں صدر منتخب ہوئے۔

1829: وائسرائے لارڈ ولیم بینٹک نے ہندوستان میں ستی پر پابندی لگا دی۔

1910: فرانسیسی ماہر طبیعیات جارج کلاڈ نے پیرس موٹر شو میں ترقی یافتہ دنیا کے پہلے نیین لیمپ کا مظاہرہ کیا۔

1912: ترکی، بلغاریہ، سربیا، یونان اور مونٹیگو نے جنگ بندی کے معاہدے پر دستخط کیے۔

1948: مشرقی بحیرہ چین میں چینی مہاجرین کو لے جانے والا بحری جہاز کیانگیا پھٹنے سے 1100 افراد ہلاک ہو گئے۔

1959: بھارت اور نیپال نے گنڈک آبپاشی اور پاور پروجیکٹ پر معاہدے پر دستخط کیے۔

1967: ہندوستان کا پہلا راکٹ (روہنی آر ایچ 75) تھمبا سے لانچ کیا گیا۔

1967: انڈونیشیا کے سابق صدر سوکارنو نظربند۔

1971: ہندوستان اور پاکستان کے درمیان جنگ شروع ہونے کے بعد ملک میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔

1975: لاؤس کی جمہوریہ کا اعلان۔

1984: بھوپال میں یونین کاربائیڈ فیکٹری سے زہریلی گیس کے اخراج سے ہزاروں افراد ہلاک اور کئی ہزار جسمانی معذوری کا شکار ہوئے۔

1989: روس کے اس وقت کے صدر میخائل گورباچوف اور اس وقت کے امریکی صدر جارج بش نے سرد جنگ کے خاتمے کا اعلان کیا۔

1994: تائیوان میں پہلے آزاد بلدیاتی انتخابات ہوئے۔

1999: چیچنیا کے گوریلوں نے 250 روسی فوجیوں کو ہلاک کیا۔

2000: فاکس میکسیکو کے نئے صدر منتخب ہوئے۔

2000: آسٹریلیا نے ویسٹ انڈیز کو ایک ٹیسٹ میچ میں شکست دے کر لگاتار 12 ٹیسٹ میچ جیتنے کا ریکارڈ بنایا۔

2001: غزہ پر اسرائیل کے حملے میں یاسر عرفات کا ہیلی کاپٹر تباہ۔

2002: یو این ای پی نے ہندوستان سمیت سات اشنکٹبندیی ممالک میں حیاتیاتی تنوع کے مطالعہ کے لیے 26 ملین ڈالر جاری کیا۔

2004: پرتگال کی سپریم کورٹ میں مونیکا کی درخواست مسترد کر دی گئی۔

2004: عراق میں پولیس اسٹیشنوں پر حملے میں 30 افراد ہلاک ہوئے۔

2004: بھارت اور پاکستان نے مناباؤ اور کھوکھراپار کے درمیان 40 سال بعد ریل رابطہ بحال کرنے پر اتفاق کیا۔

2008: ممبئی میں 23 نومبر کے دہشت گردانہ واقعے کے بعد مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ ولاس راؤ دیشمکھ نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔

2012: فلپائن میں سمندری طوفان بھوپا سے کم از کم 475 افراد ہلاک ہوئے۔

ہندوستھان سماچار


 rajesh pande