Custom Heading

قومی تحقیقاتی ایجنسی کی دہشت گردی معاملے میں سرینگر میں چار مقامات پر چھاپے ماری
قومی تحقیقاتی ایجنسی کی دہشت گردی معاملے میں سرینگر میں چار مقامات پر چھاپے ماری جموں، 14 مئی (ہ س)۔
قومی تحقیقاتی ایجنسی کی دہشت گردی معاملے میں سرینگر میں چار مقامات پر چھاپے ماری 


قومی تحقیقاتی ایجنسی کی دہشت گردی معاملے میں سرینگر میں چار مقامات پر چھاپے ماری

جموں، 14 مئی (ہ س)۔ قومی تحقیاتی ایجنسی (این آئی اے) نے ہفتہ کی صبح جموں و کشمیر میں مزاحمتی محاذ (ٹی آر ایف ) معاملے میں چار مقامات پر چھاپے ماری کی جو ممنوعہ دہشت گرد تنظیم لشکر طیبہ (ایل ای ٹی) کی ایک فرنٹل تنظیم ہے اور جموں و کشمیر میں دہشت گردی کو فروغ دینے میں اہم ادا کر رہی ہے۔ اس تعلق سے این آئی اے کی تحقیقاتی کاروائی جاری ہے۔

جموں و کشمیر میں تعینات دیگر سیکورٹی فورسز کی مدد سے دہشت گردوں کے ہمدردوں اور بھرتی کرنے والوں کے ٹھکانوں پر چھاپے مارے گئے۔ انسداد دہشت گردی ایجنسی نے 18 نومبر 2021 کو تعزیرات ہند (آئی پی سی) کی مختلف دفعات اور غیر قانونی سرگرمیاں (روک تھام) ایکٹ (یو اے پی اے) کی دفعہ 13، 17، 18، 18 بی، 38 اور 39 کے تحت مقدمہ درج کیا تھا۔ ٹی آر ایف کے یہ چار دہشت گرد سجاد گل، سلیم رحمانی عرف ابو سعد اور سیف اللہ, ساجد جٹ، لشکر کمانڈرز کے ذریعہ یونین ٹیریٹری اور ملک کے دیگر حصوں میں پرتشدد سرگرمیوں کو عمل میں لانے کے لئے جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو بنیاد پرستی، حوصلہ افزائی اور بھرتی کرنے کی سازش سے متعلق ایک کیس میں این.آئی.اے کو مطلوب ہیں۔

ہندوستھان سماچار

/شہزاد


 rajesh pande