موتیہاری ڈی اے او پر غیر قانونی جائیداد بنانے کا الزام ، محکمانہ انکوائری کا حکم
موتیہاری ، 06 دسمبر (ہ س)۔ ضلع میں تعینات ضلع ایگریکلچر افسر پر سنگین الزامات عائد کیے گئے ہیں، محک
موتیہاری ڈی اے او پر غیر قانونی جائیداد بنانے کا الزام ، محکمانہ انکوائری کا حکم


موتیہاری ، 06 دسمبر (ہ س)۔ ضلع میں تعینات ضلع ایگریکلچر افسر پر سنگین الزامات عائد کیے گئے ہیں، محکمہ زراعت کے اعلیٰ حکام کو بھیجے گئے شکایتی مراسلے میں ان پر غیر قانونی طور پر غیر متناسب اثاثے بنانے کا الزام لگایا گیا ہے، جس کی روشنی میں سکریٹری زراعت نے ان کے خلاف کارروائی کا حکم دیا ہے۔

محکمہ زراعت کے اسپیشل ڈیوٹی افسر سنیل کمار جھاکے ذریعہ یکم نومبر 2022 کو زراعت کے جوائنٹ ڈائریکٹر مظفر پور کو بھیجے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ چندر دیو پرساد، ضلع زراعت افسر، مشرقی چمپارن کے خلاف غیر قانونی طور پر غیر متناسب اثاثے حاصل کرنے کی شکایت کی گئی تھی ۔

ایسے میں شکایت کنندہ کی جانب سے موصول ہونے والی درخواست اور شواہد کی بنیاد پر دوسرے فریق کو سماعت کا موقع دینے کے بعد معاملے کی چھان بین کریں اور ایک ماہ کے اندر اندرجانچ رپورٹ دستیاب کرائیں۔

اس سلسلے میں پوچھے جانے پر ضلع ایگریکلچر افسر چندر دیو پرساد نے ہندوستھان سماچار کو بتایا کہ ہاں محکمہ کی سطح پر تحقیقات کی گئی ہے، ہم نے جائیداد کی تفصیلات میں اپنے اوپر لگائے گئے الزام کا پہلے ہی ذکر کیا ہے، غیر قانونی اثاثہ جات حاصل کیے ہیں یا نہیں؟ غیر متناسب اثاثے ہم نے شکایت کنندہ کی طرف سے بتائی گئی جائیداد کو پہلے ہی پبلک کر دیا ہے۔بتایا جاتا ہے کہ شکایت کنندہ نےضلع ایگریکلچر افسر پر الزام لگایا ہے کہ انہوں نے 10 سال میں بے پناہ دولت حاصل کی ہے ۔ پٹنہ سے لے کر اتر پردیش تک کئی شہروں میں انہوں نے اپنی بیوی کے نام اور اپنے نام پر زمینیں خریدی ہیں، اس کے ساتھ ہی انہوں نے اپنے کئی رشتہ داروں کے نام پر بھی زمین خریدی ہیں۔

ہندوستھان سماچار/ افضل/سلام


 rajesh pande