ट्रेंडिंग

Blog single photo

دہشت گردی کے خلاف پاکستانی ہائی کمیشن دہلی پر زبردست احتجاج

21/11/2020

نئی دہلی،21نومبر(ہ س)۔
آل انڈیا شیعہ -سنی فرنٹ نے پاکستان کے ذریعہ بھارت میں ہورہے دہشت گردانہ و علیحدگی پسندی کے خلاف نئی دہلی میں واقع پاکستانی ہائی کمیشن پر جاکر شدید احتجاجی مظاہرہ کیا اور پاکستانی ہائی کمشنر کو میمورنڈم دیا ہے۔ جس میں فرنٹ کے صدر ڈاکٹر سردار خان، زیڈ احمد چھمن بی جے پی کے سینئر لیڈر، قومی نائب صدر اقلیتی مورچہ عرفان احمد سمیت اہم لوگوں نے کووڈ19پر عمل کرتے ہوئے احتجاج جتایا اور پاکستان کو انتباہ دی کہ بھارت کے خلاف گھناونی حرکتیں کرنا بند کریں، کیونکہ آج کا بھارت مودی کا بھارت ہے جو ہماری طرف آنکھ اٹھا کر بھی دیکھے گا ہم ان کی آنکھیں نکالنے کی طاقت رکھتے ہیں۔ 
مودی کے خیالات کو آگے بڑھاتے ہوئے پریس کانفرنس کے دوران عرفان احمد نے کہا کہ بھارت کو بانٹنے کی سیاست پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان اپنے دماغ سے نکال دیں۔بھارت کی ایک ارب 40 کروڑ کی آبادی میں ہر شہری چاہے وہ کسی مذہب کا ہو پہلے بھارتی ہیں اور جہاں ملک کے عزت واحترام کی بات آئے گی وہاں پر ہر بھارتی چاہے وہ ہندو ہو یا مسلمان ملک پر مرمٹنے کو تیار ہے۔یہی بھارت کی جمہوریت کی پہچان ہے جو کسی کے مذموم عزائم سے کمزور ہونے والا نہیں ہے۔ آج پاکستانکے آقا پاکستان میں بیٹھ کر بھارت کے مسلمانوں کو مظلوم بتارہا ہے ، پہلے وہ خود اپنے گریبان میں جھانکیں کہ ان کے چھوٹے سے پاکستان کے اندر کتنے لوگ آج ملک وریاست بنانے کا مطالبہ کررہے ہیں۔ پہلے وہ اپنا گھر سمیٹے پھر یہاں کی بات کریں۔ اس موقع پر انہوں نے پاکستان اور چین کے تعلقات پر بھی سوال اٹھاتے ہوئے کہا کہ چاہے پاکستان اور چین جتنا بھی اتحاد کرلیں لیکن بھارت کا کچھ بھی نہیں بگاڑ سکتے ہیں۔ یہ مودی کا بھارت ہے، یہ طاقت ور بھارت ہے۔ اس لئے پاکستان فوراً گھٹیا حرکتوں کو بند کریں ورنہ اس کا انجام بھگتنے کو تیار رہیں۔
ہندوستھان سماچارمحمدخان


 
Top