क्षेत्रीय

Blog single photo

ایم پی پی ایس سی کی تیاری کرنا ہے اور پیسے نہیں تو کوئی بات نہیں، آ جائیں مولانا آزاد لائبریری

09/10/2019

ایم پی پی ایس سی کی تیاری کرنا ہے اور پیسے نہیں تو کوئی بات نہیں، آ جائیں مولانا آزاد لائبریری
بھوپال، 09 اکتوبر (ہ س)۔ 
 مدھیہ پردیش کے باصلاحیت طلباء کے لئے اچھی خبر ہے۔ ویسے تو ریاستی حکومت بھی اپنی طرف سے بلا معاوضہ کوچنگ کلاسز کی سہولت مہیا کراتی ہے تاہم یہ کلاسز زیادہ تر درج فہرست ذات اور درج فہرست قبائل کے طالب علموں کے لئے ہوتی ہیں ۔ لیکن اس بار بھوپال میں تمام طبقات سے منسلک ہنر مند طلباءکے لئے، جنہیں ریاستی انتظامی سروس میں جانے کی خواہش ہے، ان کے لئے کوچنگ کلاس شروع کی گئی ہے۔ یہ مولانا آزاد سنٹرل لائبریری میں چل رہی ہے جوکہ آئندہ تین ماہ تک جاری رہے گی۔ 
قابل ذکر ہے کہ اس کے لئے مولانا آزاد سنٹرل لائبریری اور کیریئر پاتھ انسٹی ٹیوٹ کی جانب سے تین ماہ کا کورس تیار کیا گیا ہے، جس میں ریاستی سروس کے مقابلہ جاتی امتحانات کی مفت تیاری کرائی جا رہی ہے۔ انتظامی سروس کی تیاری کرا رہے اجے جین نے بتایا کہ یہ کورس ایک اگست سے شروع ہوا ہے، اس کے لئے ہماری مشترکہ کوششوں (مولانا آزاد سنٹرل لائبریری اور کیریئر پاتھ انسٹی ٹیوٹ) نے ایک انتخابی امتحان کا انعقادسنٹرل لائبریری میں 21 جولائی کو کیا تھا جس میں 300 سے بھی زیادہ طلباء و طالبات نے حصہ لیا تھا۔ اس کے بعد اب باقاعدہ کلاسز شروع کر دی گئی ہیں۔ 
اس سلسلے میں منتخب نوجوانوں کو تربیت دے رہی سنیہ شریواستو کا کہنا ہے کہ اگر اب بھی کسی کو لگتا ہے کہ انہیں ریاستی انتظامی سروس کی تیاری کرنی ہے اور ان کے پاس اس کے لئےمعاشی قلت ہے لیکن وہ قابل ہیں، تو مولانا آزاد سنٹرل لائبریری یا کیریئر پاتھ انسٹی ٹیوٹ میں رابطہ کر سکتے ہیں۔ 
مولانا آزادسنٹرل لائبریری کی لائبریرین ڈاکٹر وندنا شرما نے کہا کہ کم وقت میں پوری تیاری کرانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ حقیقت میں وقت کو ذہن میں رکھ کر ہی یہ خاص کورس تیار کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ میرے ساتھ اس کورس کورچت مالویہ نے بنایا ہے۔ اس کی خصوصیت ہے کہ تین ماہ میں ابتدائی امتحان کی تیاری ہوگی۔ سات فل لینتھ ٹیسٹ ہوں گے۔ آگے مینس امتحان کی تیاری بھی خاص طور سے کرائی جائے گی۔ 
قابل ذکر ہے کہ بھوپال کے پرانے شہر کی سرکاری مولانا آزاد سنٹرل لائبریری میں 1 لاکھ 40 ہزار کتابوں کا ذخیرہ ہے۔ روزانہ ایک ہزار سے زیادہ طلبہمطالعہ پہنچتے ہیں۔ یہ ریاست کی شاید واحد ایسی سرکاری لائبریری ہے، جہاں اتنی بڑی تعداد میں نوجوان تعلیم مطالعہکرنے آتے ہیں۔ 
ہندوستھان سماچار


 
Top